Tuesday , 16 October 2018
بریکنگ نیوز
Home » بین الاقوامی » امریکا و کنیڈا » اوباما نے عہدے کا غلط استعمال کیا، جانچ ہو: ٹرمپ
اوباما نے عہدے کا غلط استعمال کیا، جانچ ہو: ٹرمپ

اوباما نے عہدے کا غلط استعمال کیا، جانچ ہو: ٹرمپ

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پارلیمنٹ پر زور دیا ہے کہ انتخابی مہم کے دوران باراک اوباما نے ایگزیکٹو طاقتوں کا غلط استعمال کیا تھا یا نہیں اس کی جانچ کی جائے. اس سے پہلے ٹرمپ نے اپنے پیشرو پر فون ٹیپ کرنے کا الزام لگایا تھا.
ٹرمپ کے پریس سیکرٹری نے کہا کہ انتخابات میں روسی مداخلت کے الزام کی بھی تحقیقات ہونی چاہئے کیونکہ یہ کافی سنگین الزام ہے.

ٹرمپ نے اس معاملے میں بہت ٹویٹ کئے ہیں لیکن انہوں نے کوئی ثبوت فراہم نہیں کیا ہے. اس الزام پر اوباما کے ترجمان نے کہا ہے کہ سابق صدر نے کسی بھی امریکی شہری کو سرولانس پر رکھنے کا حکم نہیں دیا تھا.

صدارتی انتخابات میں روسی حمایت کو لے کر ٹرمپ جانچ کے گھیرے میں ہیں. ایسے میں ٹرمپ نے اس ہفتے کے آخری میں اپنے گھر فلوریڈا سے ٹویٹ کرکے اس طرح کے الزامات لگائے ہیں.

ٹرمپ نے اس مبینہ فون ٹیپنگ کے مقابلے نکسن کے واٹر گیٹ اسکینڈل سے کی ہے. واٹر گیٹ امریکہ میں 1972 کے اہم سیاسی اسکینڈل ہے. واٹر گیٹ کے بعد صدر رچرڈ نکسن کو عہدہ چھوڑنا پڑا تھا.
ٹرمپ کے اس سنسنی خیز دعوے کے بعد وہاں کی دونوں اہم جماعتوں ریپبلکن اور ڈیموکریٹ نے تفصیلی معلومات مانگی ہے. فلوریڈا سے ریپبلکن سینیٹر مارکو روبيو نے اتوار کو کہا کہ اس معاملے میں وائٹ ہاؤس کو جواب دینا چاہئے کہ صدر واقعی میں کہہ کیا رہے ہیں.
تاہم وائٹ ہاؤس کے پریس سیکرٹری سین سپاسر نے اس معاملے میں کوئی ثبوت نہیں دیا. انہوں نے کہا، ” 2016 میں انتخابات سے ٹھیک پہلے سیاست سے حوصلہ افزائی کی انکوائری کا حکم دیا گیا. صدر ٹرمپ نے اس معاملے کی تحقیقات میں درخواست کی ہے کہ كاگریسنل انٹیلی جنس کمیٹی اس بات کی بھی جانچ کرے کہ 2016 میں ایگزیکٹو طاقتوں کا غلط استعمال تو نہیں کیا گیا. ”
انہوں نے کہا کہ اس معاملے میں جب تک کچھ ٹھوس ہو نہیں جاتا ہے تب تک نہ تو وائٹ ہاؤس اور نہ ہی صدر کوئی تبصرہ کریں گے.

Comments

comments