Thursday , 16 August 2018
بریکنگ نیوز
Home » فلمی دنیا » رئیس شاہ رخ کا منفرد انداز
رئیس شاہ رخ کا منفرد انداز

رئیس شاہ رخ کا منفرد انداز

بالی ووڈ کے بادشاہ کہلانے والے شاہ رخ خان کی نئی فلم’’ رئیس‘‘ اس سال یعنی2017 میں کسی بھی خان اداکار کی ریلیز ہونیوالی پہلی فلم ہے۔ سلمان خان کی ’’ سلطان‘‘ اور عامر خان کی’’ دنگل‘‘ کی طرح یہ فلم بھی حقیقی کہانی پر مبنی ہے۔
یہ کہانی گجرات کے عبد الطیف کی ہے جن کا تعلق انڈرورلڈ سے تھا۔ ان کو داؤد ابراہیم کا ساتھی سمجھا جاتا تھا۔ ان کا کافی سیاسی اثر و رسوخ بھی تھا۔ شاہ رخ کی اس فلم کو عوام کا ملا جلا رد عمل حاصل ہورہا ہے۔ اگرچہ اس فلم نے کوئی دھماکہ نہیں کیا لیکن پہلے د نوں میں128کروڑ روپے کی کمائی کر کے اس نے کم سے کم شاہ رخ کیلئے ایک نئی امید پیدا کردی ہے جن کی2016کی کوئی بھی فلم خاص کامیابی حاصل کرنے میں ناکام رہی تھی۔ اس فلم کو 2016 میں ہی ریلیز ہونا تھا لیکن پاکستانی اداکاروں کے خلاف مہم کی وجہ سے اس کو ملتوی کرنا پڑا۔ اس فلم میں پاکستانی اداکارہ ماہرہ خان نے شاہ رخ کی اہلیہ آسیہ کا کردار کیا ہے جبکہ نواز الدین صدیقی نے اس پولیس آفیسر کا رول ادا کیا جس نے ریئس کی جرائم کی دُنیا کو برباد کردیا تھا۔ جہاں تک اصل عبد الطیف کا تعلق ہے وہ احمد آباد کا رہنے والا تھا نو عمری میں شراب خانے میں ملازمت کے ساتھ اپنی زندگی کا آغاز کیا اور شراب کا بہت بڑا تاجر بن گیا۔اس نے گجرات کے حالات کا فائدہ اُٹھاتے ہوئے اپنے کاروبار کو وسعت دی۔ وہ قتل‘اغوا‘تاوان کے100 مقدمات میں مطلوب تھا۔ اس پر آر ڈی ایکس سربراہ کرنیکا بھی الزام ہے جس کا استعمال 1993 ممبئی بم دھماکوں میں کیا گیا ۔ 1997 میں احمد آباد پولیس نے لطیف کو انکاونٹر میں ہلاک کردیا۔ اس کی ہلاکت کے بعد اس کے ایک بیٹے نے اس وقت کے چیف منسٹر شنکر سنگھ واگھیلا کے خلاف انتخابات میں حصہ لیا تھا۔ شاہ رخ خان کو لطیف کے کردار میں کافی پسند کیا گیا ہے ۔ ان کے میک اپ نے ان کو بالکل مختلف روپ دیا ہے۔ نواز الدین صدیقی کی اداکاری قابل تعریف رہی ہے جبکہ ماہرہ خان کو رونے دھونے اور چند گانوں تک محدود کردیا گیا ہے۔ ’’ ریئس‘‘ ایک ایکشن فلم ہے اور دیکھنے والوں کو کافی طویل بھی معلوم ہوتی ہے چونکہ بالی ووڈ میں حقیقی زندگی کے واقعات پر بننے والی فلموں کا سلسلہ چل پڑا ہے ۔ اسلئے’’ رئیس‘‘ کو لوگ پسند کررہے ہیں۔

Comments

comments