Friday , 17 August 2018
بریکنگ نیوز
Home » دلچسپ دنیا » 58سال سے ایک شخص نے پانی نہیں پیا
58سال سے ایک شخص نے پانی نہیں پیا

58سال سے ایک شخص نے پانی نہیں پیا

مصر میں ایک76سالہ شخص کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ اس نے58برس سے نہ تو پانی پیا نہ چائے یا کافی کو ہاتھ لگایا اس کے باوجود وہ زندہ ہے اور اس کو کبھی کسی ڈاکٹر کی ضرورت نہیں پڑی ہے۔ اس کا نام علی جنیش ہے وہ مصر کے شمال میں واقع کفر الشیخ نامی ایک صوبہ میں رہتا ہے۔ وہ ایک گاؤں کا سربراہ (سرپنچ )ہے۔ اس شخص کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ اس نے پانی تو درکنار پانی والی سبزیوں اور ترکاریوں جیسے تربوز آلو وغیرہ کو بھی ہاتھ نہیں لگایا۔اس شخص کی صحت کا راز جاننے کی جب میڈیا نے کوشش کی تو اس نے ازراہ مذاق کہا کہ ڈاکٹر کی فیس بچانے کیلئے وہ پانی نہیں پی رہے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ پانی کی قلت کی وجہ سے انہوں نے سوچا کہ اسکا استعمال ترک کرنے کی مشق کی جائے چنانچہ انہوں نے1959 میں اپنی شادی کے3مہینے بعد سے ہی پانی پینا چھوڑ دیا۔دلچسپ بات یہ ہے کہ پانی کا استعمال ترک کرنے سے پہلے علی کو بہت پیاس لگتی تھی اور وہ اونٹ کی مانند غٹاغٹ بہت سا پانی پی جاتے تھے جس کی وجہ سے ان کو لوگ چڑاتے تھے جس سے ان کو شرمندگی کا سامنا کرنا پڑتا تھا۔وہ اس عادت کو ترک کرنے کیلئے ڈاکٹر کے پاس گئے تو اس نے بتایا کہ پانی نے ان کے معدے میں شدید جلن پیدا کردی ہے اور جتنا پانی پیو گے اتنی زیادہ پیاس بڑھے گی۔ڈاکٹر نے مشورہ دیا کہ چند دن تک پانی کا استعمال ہی بند کردیا جائے۔ ہوا یوں کہ علی جب پانی نہیں پیتے تو ٹھیک رہتے اور پانی پیتے ہی جلن شروع ہوجاتی جس کو پیاس سمجھ رہے تھے۔ ان کے والد کے ایک دوست نے پانی کے بجائے گنے کا شربت پینے کا مشورہ دیا لیکن اس سے بھی کوئی افاقہ نہیں ہوا۔پھر ایک اور شخص کے مشورے پر ان کو سرخ گنے کا رس دیا گیا جس سے افاقہ ہوا۔ علی کے والد گاؤں کے سرپنچ تھے انہوں نے گنے اور اس کا رس نکالنے والی مشین لا کر دی اور اپنے کھیتوں کے ایک حصے میں سرخ گنے کی کاشت بھی شروع کردی چنانچہ علی58 برس سے کھانے کے ساتھ صرف یہ جوس لیتے ہیں وہ پانی یا اس سے تیار ہونیوالی کوئی شئے نہیں لیتے۔پانی کا استعمال بند کرنے کے بعد سے ان کو کسی ڈاکٹر کو دکھانے کی ضرورت بھی پیش نہیں آئی ہے۔

Comments

comments