Tuesday , 16 October 2018
بریکنگ نیوز
Home » دلچسپ دنیا » عشق بوڑھا نہیں ہوتا!
عشق بوڑھا نہیں ہوتا!

عشق بوڑھا نہیں ہوتا!

محبت ہمیشہ جوان رہتی ہے کبھی بوڑھی نہیں ہوتی اگرچہ انسان کی عمر ڈھل جاتی ہے۔ محبت کی ان گنت داستانیں تاریخ کا حصہ بن چکی ہیں۔ حال و ماضی کی ایسی کئی مثالیں ہیں جن کو لوگ تعجب اور دلچسپی سے سنتے ہیں۔ایسا ہی ایک واقعہ گزشتہ دنوں پاکستان کے صوبہ پنجاب میں پیش آیا۔جہاں ایک95 سالہ شخص نے اپنی دیرینہ محبت سے جو90 سال کی ہوچکی ہیں اس عمر میں شادی کر لی۔غلام فرید اور حیاتہ بی کی داستان محبت اس وجہ سے دلچسپی سے خالی نہیں ہے کہ دونوں نے75 سال پرانی محبت کو رشتہ ازدواج میں بدل دیا اگرچہ ان کی عمریں ڈھل چکی ہیں۔75 سال پہلے ان دونوں میں محبت ہوگئی تھی۔غلام فرید نے حیاتہ بی کے گھر پیام بھی بھیجا تھا لیکن دونوں خاندان اس کیلئے تیار نہیں ہوئے اور اس طرح دونوں نے اپنی محبت کا گلا گھونٹ دیا۔ حیاتہ بی بیاہ کر کے دو ر چلی گئیں اور غلام فرید نے بھی ایک خاتون سے شادی کر لی اس طرح دونوں کی راہیں جدا ہونے کے بعد وہ دل سے محبت کو جدا نہ کر سکے۔ پھر وقت گذرتا گیا دونوں کی اولادیں ہوئیں‘پوتے‘پوتیاں ہوئے۔حیاتہ بی بیوہ ہوگئیں تو غلام فرید نے پھر ان کو شادی کا پیام بھیجا۔تا ہم اس وقت حیاتہ بی بھی 90 برس کی ہوچکی تھیں۔غلام فرید کی بیوی کا بھی انتقال ہوچکا ہے۔ حیاتہ بی نے بتایا کہ وہ غلام فرید کی محبت سے متاثر تھیں لیکن اب عمر ڈھل چکی تھی پوتے‘پوتیاں تھیں ایسے میں شادی کا تصور محال تھا۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ جب ان کے ہی پوتے پوتیوں کو اس محبت کا پتہ چلا تو انہوں نے دونوں کو ملانے کا فیصلہ کیا اور غلام فرید کے بچوں سے رابطہ کر کے ا ن کو اس شادی کیلئے تیار کر لیا اس طرح دونوں کی شادی دھوم دھام سے کردی گئی۔ اس طرح جوان محبت جو جدا ہوگئی تھی پیرانہ سالی میں ایک ہوگئی۔

Comments

comments