Thursday , 16 August 2018
بریکنگ نیوز
Home » بزنس » 70سال بعد نوکیا3310کی واپسی
70سال بعد نوکیا3310کی واپسی

70سال بعد نوکیا3310کی واپسی

جس طرح لوگ ہر چپل کو باٹا کا سمجھتے ہیں اسی طرح ایک دور میں موبائیل فون کا دوسرا نام نوکیا ہوا کرتا تھا۔استعمال بڑھتا گیا ‘ مسابقت بڑھتی گئی‘نئی کمپنیاں آتی گئیں اور نوکیا اس ہجوم میں کہیں کھو گیا۔اس کمپنی نے 70 سال قبل ایک فون متعارف کروایا تھا جو اس قدر مضبوط اور مستحکم تھا کہ لوگوں نے اس کو برسوں استعمال کیا۔آج ہزاروں روپے ادا کر کے بھی ایسے نئے فون لئے جارہے ہیں جو بہت نازک ہوتے ہیں ہاتھ سے چھوٹ جائیں تو ہزاروں روپے ضائع ہو جاتے ہیں لیکن نوکیا کا فون کافی مضبوط تھا اور یہی مضبوطی اس کی مقبولیت کی بھی وجہ بنی تھی۔ اس فون کی مقبولیت کا اندازہ اس بات سے لگا سکتے ہیں کہ2005میں کمپنی نے 3310ماڈل کے12کروڑ60لاکھ یونٹس پوری دُنیا میں فروخت کئے تھے۔اس کے بعد کمپنی نے یہ فون تیار کرنا بند کردیا۔فن لینڈ میں قائم نوکیا نے اب دوبارہ اس کو مارکٹ میں لانے کا اعلان کیا ہے اس فون کو دوبارہ متعارف کروانے کا مقصد یہ ہے کہ نوکیا کمپنی اپنی وہی شان و شوکت کو بحال کرنے کیلئے ایک مرتبہ پھر موبائیل فونس کی دُنیا میں قدم رکھنے جارہی ہے۔ اس فون کو بار سلونا میں منعقدہ موبائیل ورلڈ کانگریس میں پیش کیا گیا اس فون میں پہلے انٹر نیٹ کی سہولت نہیں تھی اب محدود سہولت کے ساتھ اس کو متعارف کروایا گیا ہے۔ اس فون کی جو خصوصیت تھی وہ اس کی چارجنگ تھی۔ کمپنی نے اعلان کیا ہے کہ وہ ایک مہینے تک کا اسٹانڈ بائی ٹائم اور22گھنٹے ٹاک ٹائم کی گیارنٹی دے سکتی ہے۔

Comments

comments