Friday , 24 November 2017
بریکنگ نیوز
Home » کھیل » حنا سدھو شوٹنگ کے عالمی مقابلوں میں شاندار مظاہرہ
حنا سدھو  شوٹنگ کے عالمی مقابلوں میں شاندار مظاہرہ

حنا سدھو شوٹنگ کے عالمی مقابلوں میں شاندار مظاہرہ

ریو اولمپکس میں کوالیفائنگ راونڈ میں ہی باہر ہوجانے والی شوٹر حنا سدھو نے نئی دہلی میں انٹر نیشنل شوٹنگ اسپورٹس فیڈریشن کا ورلڈ کپ جیت لیا ہے۔ سابقہ عالمی چمپئین حنا کو گزشتہ سال برازیل میں منعقدہ ریو اولمپکس میں10میٹر کے خواتین پستول مقابلوں میں 14واں مقام حاصل ہوا تھا۔ دہلی میں منعقدہ عالمی مقابلوں میں اس نے جاپان کی شوٹر کو شکست دی۔ ان مقابلوں میں ایک اور شوٹر جیتو رائے بھی فاتح رہے۔ ابھی تک شوٹنگ میں مکسڈ ڈبلز کو ٹرائیل بنیادوں پر منعقد کیا جارہا ہے ۔ 2020 ٹوکیو اولمپکس میں اس کو باضابطہ متعارف کروایا جائیگا۔ اس کیلئے ہندوستانی نشانہ باز ابھی سے پریکٹس کررہے ہیں۔ ہریانہ کی رہنے والی حنا کا کہنا تھا کہ ریو اولمپکس میں وہ احساس کمتری کا شکار تھی اور اس نے دفاعی حکمت عملی اختیار کی تھی جس کی وجہ سے اس کا مظاہرہ بہتر نہیں رہا اب اس نے اپنی حکمت عملی بدل دی ہے اور جارحیت کا مظاہرہ کرنا شروع کیا ہے تا کہ سامنے والے کھلاڑی پر اثر ڈالا جاسکے۔27سالہ سدھو نے بتایا کہ ریو میں ہندوستانی شوٹرس نے شرمناک مظاہرہ کیا تھا۔ 2000 سڈنی اولمپکس کے بعد سے یہ پہلی مرتبہ تھا کہ ہندوستانی شوٹرس کا جتھ کسی میڈل کے بغیر واپس آگیا تھا اس کے بعد سے بہتر مظاہرے کیلئے ہم پر دباؤ بڑھ گیا تھا۔ سدھو نے انڈین اولمپک اسوسی ایشن کے حالیہ فیصلے پر بھی ناراضگی ظاہر کی ہے جس میں شوٹرس کو پریکٹس کیلئے اصلی بندوق کے بجائے لیزر بیم استعمال کرنے کا مشورہ دیا گیا ہے۔ حناسندھو نے بتایا ہے کہ اس سے صلاحیتیں متاثر ہوں گی ۔ فائر کرنے اور صرف بیم سے کھیلنے میں بہت فرق ہے ایسا لگے گا کہ جیسے ہم ویڈیو گیم کھیل رہے ہیں۔حنا کو اپریل2014 میں عالمی نمبر ایک رینک دیا گیا تھا وہ اس مقام پر پہنچے والی پہلی ہندوستانی خاتون شوٹر ہے اس کے علاوہ2013 میں وہ ورلڈ کپ میں گولڈ میڈل جیتنے والی پہلی ہندوستانی خاتون بھی بن گئی تھیں۔ عالمی سطح پر انجلی بھاگوت اور گگن نارنگ کے بعد شاندار مظاہرہ کرنیوالی وہ تیسری ہندوستانی کھلاڑی ہے۔ حنا سدھو کا تعلق بااثر جاٹ گھرانے سے ہے۔ ان کے ایک نشانہ باز کی حیثیت سے اُبھرنے میں اس کے انکل اندرجیت سدھو کا اہم رول رہا ہے۔ اس کے والد راج ببر سدھو بھی قومی شوٹر رہے ہیں۔چھوٹا بھائی کرن بیر بھی ایک شوٹر ہے۔ حنا سدھو نے رونق پنڈت سے جو پستول شوٹر ہے2013 میں شادی کی۔دلچسپ بات یہ ہے کہ حنا سدھو ایک ڈینٹل سرجن ہے اس کے باوجود اس نے اسپورٹس میں نمایاں خدمات انجام دیئے ہیں۔

Comments

comments