Thursday , 16 August 2018
بریکنگ نیوز
Home » حسن و صحت » قبض اور موٹاپا ‘ام الامراض؟

قبض اور موٹاپا ‘ام الامراض؟

موٹے فراد کی فوٹوفریم میں نہ بیٹھنا اور فوٹوفریم کا گلاس (شیشہ ) فریم میں سیٹ نہ ہونا بار بار گلاس گرنے کی وجوہات اسکا بڑھتا ہواپیٹ ؟ قبض اور موٹاپا شدت پکڑنے کی وجوہات ہیں کھا نیکی اشیاء فریج اور اِدھراُدھرپڑے رہنے کے بجائے پیٹ ہی میں پڑارہنا مناسب سمجھ رہے ہیں کھانے کے معاملے میں فراخدلانہ حماقتوں کا نتیجہ خرابی ہا ضمہ قبض‘گرانی معدہ ‘ جگر وطحال کی سوزش ‘ معدے کی جلن ‘ دردجگر ‘ بواسیر‘ آنتوں کی سوزش‘ طبیعت میں بو جھل پن ‘حدت خون ‘ اور تبخیر معدہ ‘گیسٹک ٹر بل‘ ایسے عوارض لاحق ہورہے ہیں ۔سب سے زیادہ افسوسناک اور تعجب کی بات یہ ہے کہ اچھے خاصے ہوش مند تعلیمیا فتہ افراد بھی ان باتوں کو سمجھنے کی کو شش نہیں کر تے کہ جب دو کھانوں کا درمیانی وقفہ پانچ یا چھ گھنٹوں سے کم ہوگا تو لازم ہے کہ نقص ہضم کی شکایت پیداہوگی قبض اور موٹاپے کے اسباب مندرجہ ذیل ہے (1) مرغن تیز مصالحہ دار‘ اور نیم پختہ وثقیل غذائیں طاقت کے بجائے زوال صحت کا باعث بنتے ہیں (2)ہمیشہ شکم سیر ہو کر کھانے والے‘ امراض کا مجموعہ بن جاتے ہیں (3) کھانے کے دور ان بار بار پانی پینا بالخصوص موسم گرما میں بر فیلے پانی کا بیجا استعما ل ہر نوع کی غذاء کو معدے کیلئے بلائے بے درماں بنا دیتا ہے (4) بکثرت تمباکو اور کولڈرنگ وچائے نوشی سے معدے کے لاتعداد عوارض رونماہوتے ہیں (5) چاول کا بکثرت استعما ل معدے کی کئی خرابیوں بالخصوص جگر کے مہلک عوارض کا باعث بنتا ہے(6) موسم گرمامیں انڈے مچھلی و چکن کھا نیکی عادت اپنے نظام صحت کیلئے مضر ہے (7) متضاد ‘ تاثیر یعنی گرم اور سرد تا ثیر رکھنے والی اشیاء کا بیک وقت استعمال معدے کی قوت واستعداد پر خراب اثر ڈالتا ہے(8) کھانے کے فوراًبعد چائے و کولڈرنگ نقص ہضم اور بھنے ہوئے گوشت کے بعدتخمہ پیدا کرسکتا ہے(9) معدے سے بنی اشیاء کابکثرت استعمال اور باسی ترش غذاء کا استعمال ہر حالت میں نقصاندہ ہے (10) زیادہ گھی‘ نمک اور میٹھاس والی غذاؤں کا بکثرت استعمال ضرر صحت کا موجب ہے (11) سبز یوں او ردالوں پر گوشت خوری کو ہر حالت میں ترجیح دینا فشار الدم‘ سوزش‘ سینہ اور معدے میں ‘حدت خون اور سومزاج ایسے امراض کو دعوت دینے کے مترادف ہے(12) لقمہ کو اچھی طرح چباکر نہ کھانا جلد جلد کھانا اپنے نظام ہاضمہ کو بگاڑنے کا موجب ہے (13)مرغن غذاؤں والی دعوتوں بالخصوص شادی بیاہ کی تقریبات میں بے تحاشہ کھانیکی ایک وقت کی غلطی کم ازکم دوہفتہ تک نظام معدہ کو متاثر رکھتی ہے (14) پولٹری چکن وانڈے افادہ صحت کے بجائے خرابی صحت کا باعث ہے(15) خلوے معدے کی حالت میں چائے کولڈرنگ واٹر کا استعمال قوائے ہضم کوخراب کرتا ہے(16) تربوز کے ساتھ چاول‘سرکہ کے ساتھ شہد‘ دودھ دہی کے ساتھ تربوز‘ مچھلی کے ساتھ دودھ‘ کھیراککٹری کے ساتھ شربت یا لسی کا استعمال قولنج‘ شدیدتخمہ‘سخت فالج فسادمعدہ کا باعث ہے اگر عوام الناس ان چند احتیاط امور کو ملحوظ رکھیں تو یقیناً وہ ہر نو ع کے شکمی عوارض سے محفوظ رہ سکتے ہیں ہر شخص کو خواہ وہ کتنا ہی قوی الحبثہ‘ صاحب قوت وطاقت اور صحتمند کیوں نہ ہوغذاؤں کے استعمال میں احتیاط واعتدال کی روش کبھی ترک نہ کرنا چاہیئے۔

Comments

comments